Skip to content

“صرف مردانہ خواتین اور نسوانی مرد ہمجنس ہوتے ہیں ـ”

کسی بھی معاشرے میں موجود “نسوانی” اور “مردانہ” خصوصیات کا اندازہ اس کے انفرادی کلچر کی بنیاد پر کیا جاتا ہےـ مثلاً پاکستانی معاشرے میں چاہے ایک خاتون اپنے لباس و اطوار اور نشست و برخاست میں نسوانیت کی مثال ہی کیوں نہ ہو مگر اگر اس کے بال چھوٹے ہوں گے تو اس کو مردانہ خصوصیات کا حامل تصور کیا جائے گا جبکہ دوسرے معاشروں کے کلچر کے مطابق چھوٹے بال، حتیٰ کہ گنج بھی نسوانیت کی انتہا گردانی جاتی ہےـ

اگر ہم اپنی معاشرتی روایات کو مدنظر رکھتے ہوئے نیچے دی گئی دونوں خواتین کے جنسی میلان کے متعلق سوچیں تو یقیناً دھوکا کھا جائیں گے ـ کیونکہ بائیں جانب چھوٹے بالوں میں مشہور اداکارہ کیٹ بلینشٹ ہے جہ کہ مخالف جنس فرد ہے جبکہ دائیں جانب لمبے بالوں می مشہور اداکارہ جوڈی فاسٹر ہے جہ کہ لیزبیئن ہےـ لہذا یہ کسی طور ضروری نہیں کہ نسوانی خصوصیات کے حامل مرد اور مردانہ خصوصیات کی حامل خواتین ہی ہم جنس ہوں ـ